خوشحالی کا سورج طلوع ہوگا

تازہ ترین—- جھنگ کے علاقے حویلی بہادر شاہ میں گیس پائپ لائن منصوبے کے سنگ بنیاد کی تقریب سےnawaz sharif خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم نواز شریف کا کہنا تھا کہ ملک  میں  سب  سے بڑا مسلہ بجلی کا بحران ہے- 2017  یا 2018 تک قابو پالیا جائے گا، بجلی کی لودشیڈنگ کا خاتمہ ۱۰ سال سے پہلے ختم ہو جانا چاہیے-  بجلی کا بحران ختم کرنا سب سے اہم کام ہے- وزیرعظم کا مزید کہنا تھا کہ پرویز مشرف کے زمانے سے ملک میں لوڈشیڈنگ برقرار ہے- اور2018 میں ملک سے لوڈشیڈنگ کا خاتمہ ہونا بہت بڑی کامیابی کا انعام ہے ۔ ان کا کہنا تھا کہ ترقیاتی منصوبوں کو پایہ تکمیل تک لے جانے کیلے  کچھ وقت  درکار ہے لیکن کچھ لوگو ں کا کہنا ہے کہ حکومت ڈیلیور نہیں کر رہی، یہ ملک بھر میں جو ترقیاتی کام ہورہا ہے یہ ترقیاتی منصوبے بننا ڈیلیور نہیں تو کیا ہے- گردو و غبار اڑانے والے آج بھی موجود ہیں وہ گرد اڑاتے رہیں گے اور ہم منزل تک پہنچیں گے، جو لوگ تنقید کرتے ہیں وہ دیکھیں کہ ملک میں امن بحال ہو رہا ہے- حکومت نے 93 ارب روپے کے منصوبے کو 55 ارب روپے میں لگایا، یہی نہیں تین منصوبوں پر مجموعی طور پر 110 ارب روپے کی بچت کی ہے۔ اس  ملک میں خوشحالی کا سورج طلوع ہو گا ملک میں خوشحالی اپنا رنگ بکھیرے گی- اور کب تک ہم خوشیوں کو ترستے رہیں گےاور کب تک اس کیھل کود کو جاری رکھے گے- تنقید کرنے والوں کو غالبا کوئی اور کام نہیں آتا ہے- عوام نے ہمیں خدمت کا موقع دیا ہے – عوام دیکھیں گے کہ خدمت سے پاکستان کا نقشہ تبدیل ہو گا- ملک میں امن ،خوشحالی ہو گی ،دہشت گردی کا خاتمہ ہو گا اور ملک ترقی کی طرف گامزن ہو گا- ان کا مزید کہنا تھا کہ ملک آگے بڑھے گا اور کراچی کی روشنیاِں دوبارہ بحال ہو گی- ملک میں بزنس آئے گا- ہم عوام  کے پیسے کو ان کی امانت سمجھتے ہیں-

Leave a Reply