طالبان بھی مذاکرات کے حامی

تازہ ترین) طالبان نے امن مذاکرات کی بحالی کی خواہش کا اظہار کردیا ہے۔ طالبان کی طرف سے جاری ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ ہم جنگ ختم کرنے کے لیئے بامعنی مذاکرات کے آغاز کے لیئے تیار ہیں۔  ہمtaliban اس بات پر یقین رکھتے ہیں کہ جب افغان شہریوں کو قبضے کے خاتمے اور غیر ملکی فوجوں کی واپسی کے حوالے سے یقین دہانی کروائی جائے گی تو افہام و تفہیم اور بات چیت سے تمام مسائل باآسانی حل ہوجائیں گے۔

یاد رہے کہ کچھ روز قبل وزیراعظم نواز شریف نے کہا تھا کہ ان کی حکومت  امن مذاکرات کو دوبارہ شروع کرنے کے لیئے کوشش کرسکتی ہے۔ تو دوسری جانب پاکستان دفتر ِ خارجہ کے ترجمان خلیل اللہ نے ہفتہ وار بریفنگ کے دوران بتایا  ہے کہ پاکستان افغانستان میں امن اور تحفظ کی حمایت کرتا رہے گا کیونکہ یہ پاکستان کے وسیع تر مفاد میں ہے ۔ خلیل اللہ کا مزید کہنا تھا کہ پاکستان نے پہلے مرحلے کی میزبانی کی اور اب اگر افغان حکومت چاہے تو ایک اور مرحلے کی میزبانی کرنے کو بھی تیار ہے۔

Leave a Reply