ترکی ڈراموں پر پابندی عائد

Turkey dramas, ban Turkish dramasدمشق (تازہ ترین) شام نے ترکی میں تیار ہونے والے ڈراموں اور فلموں کی عربی میں ڈبنگ پر پابندی عائد کر دی ہے اور بشار الاسد حکومت کے ایک رکن پارلیمینٹ نے کہا ہے کہ وہ ترکی کے ڈراموں کو ”ٹوائلٹ“ میں بہا دیں گے۔ تفصیلات کے مطابق شامی پارلیمینٹ میں کثرت رائے سے فیصلہ کیا گیا ہے کہ شوبز سے تعلق رکھنے والی کوئی تنظیم یا کمپنی ترک فلموں کی عربی میں ڈبنگ نہیں کرے گی اور نہ ہی انہیں شام کے کسی ٹی وی چینل پر نشر کیا جائے گا۔ خبر رساں ادارے کے مطابق یہ فیصلہ ترکی کی جانب سے بشارالاسد کی مخالفت کے باعث کیا گیا ہے۔
شامی پارلیمینٹ کے اس فیصلے پر فنکاروں اور عوامی حلقوں نے اس فیصلے کو مسترد کرتے ہوئے اسے سیاسی فیصلہ قرار دیدیا ہے اور ذرائع ابلاغ میں اس کا خوب مذاق بھی اڑایا جا رہا ہے۔ سماجی رابطوں کی ویب سائٹوں پر کچھ لوگوں نے اس کی شدید مذمت کی ہے جبکہ بعض نے بشار الاسد کی حکومت پر خوب غصہ نکالا ہے اور کچھ نے اس فیصلے کو بے معنی قرار دیا ہے۔ بہت سے شہریوں نے اس کا خوب مذاق اڑایا ہے۔ سماجی رابطے کی

Leave a Reply