جوہری ہتھیار محفوظ ہاتھوں میں ہیں۔

(تازہ ترین) پاکستان کے وزیر اعظم نواز شریف نے چار روزہ سرکاری دورے پر امریکہ روانہ ہونے سے قبل کہا ہے کہ پاکستان کی جوہری حیثیت بیرونیNawaz Shrief leaves for USA جارحیت کے خلاف ہے۔

خیال رہے کہ اس سے قبل وائٹ ہاؤس نے کہا تھا کہ وزیر اعظم پاکستان نواز شریف کے دورہ امریکہ میں جوہری ہتھیاروں کی سکیورٹی کی بات تو ہو گی لیکن جوہری معاہدے کے امکانات نہیں ہیں۔

نواز شریف اپنے اس دورے کے دوران صدر باراک اوباما سمیت امریکی امور خارجہ کمیٹی کے چیئرمین اور سینیٹ کی خارجہ تعلقات کی کمیٹی کے ارکان سے بھی ملاقات کریں گے۔

پاکستانی وزیر اعظم اپنی ان ملاقاتوں میں خطے کی صورتحال، دفاعی معاملات، دہشت گردی کے خلاف جنگ، معیشت و تجارت، تعلیم، صحت اور ماحولیاتی تبدلیوں پر بھی بات کریں گے۔

نواز شریف کا کہنا تھا کہ ’پاکستان اور امریکہ کے تعلقات کافی بہتر انداز میں آگے بڑھ رہے ہیں۔‘ تاہم انھوں نے پاک امریکہ سٹریٹیجک مذاکرات کو کثیرالجہتی انداز میں بڑھانے کی خواہش کا اظہار بھی کیا۔

انھوں نے کہا کہ پاکستان ایک ذمہ دار جوہری ریاست ہے اور اس نے اپنے جوہری اثاثوں کی حفاظت کے لیے فول پروف سکیورٹی انتظامات کر رکھے ہیں۔

نواز شریف نے دہشت گردی کے خلاف پاکستان کی قربانیوں اور کوششوں کا ذکر بھی کیا اور کہا کہ پاکستان جنوبی ایشیا میں امن و خوشحالی کے لیے جنگ لڑ رہا ہے۔

Leave a Reply