پاکستانی ٹیم کے لیے کوچنگ کی خواہش ظاہر کر دی

   کراچی – تازہ ترین–  انضمام الحق نے پاکستانی ٹیم کی کوچنگ کیلیے بھی خواہش  ظاہر کر دی، ان کا کہنا ہےpaistani team کہ وہ پاکستانی ٹیم کے لیے کوچنگ کرنا چاہتے ہیں- حال ہی میں افغانستانکے ساتھ ایک سالہ معاہدہ کرنے والے سابق کپتان کا کہنا ہے- اگر پی سی بی میرے تجربے سے فائدہ لینا چاہتا ہے تو میں کوچنگ کے لیے تیار ہوں-

نضمام الحق نے بی بی سی کو  انٹرویو میں کہا کہ  میں کوچنگ کے اس نئے تجربے سے لطف اٹھا رہا اور اسے مستقل طور اسے جاری رکھنا چاہوں گا، آج میں جس مقام ہر ہوں اور جومقام مجھے ملا ہے وہ صرف اور صرف پاکستان سے کھیلنے سے ملا ہے اگر بورڈچاہتا ہے تو میں اس کے لیے تیار ہوں – لہذا اگر بورڈ نے میرے تجربے سے فائدہ اٹھانا چاہا تو ہر وقت تیار ہوں۔

تفصیلات کے مطابق افغانستان نے انضمام الحق کی خدمات دورہ زمبابوے میں بطور ہیڈ کوچ حاصل کی تھیں، ٹیم نے وہاں پہلی بارکسی ٹیسٹ سائیڈ کے خلاف ون ڈے اور ٹی ٹوئنٹی سیریز میں کامیابی حاصل کی، گذشتہ دنوں انھوں نے افغانستان سے ایک سالہ معاہدہ کر لیا مگر ان کا دل اپنے ملک کیلیے ہی دھڑکتا ہے۔ لیکن وہ اب بھی پاکستان سے منسلک ہیں اور پاکستانی ٹیم کے لیے کوچنگ کرنا چاہتے ہیں-

انضمام الحق جمعرات کو ایک دن کے لیے کابل جا رہے ہیں، جہاں مقامی ٹی ٹوئنٹی ٹورنامنٹ کا فائنل دیکھنے کے ساتھ ہیڈ کوچ پریس کانفرنس بھی کریں گے، خانہ جنگی کے شکار ملک جاتے ہوئے وہ کسی قسم کے خوف میں مبتلا نہیں، انھوں نے کہا کہ میری فیملی کو اگرچہ اس بارے میں پریشان ہے لیکن میری سوچ سب کے سامنے ہے، زندگی اور موت اللہ کے ہاتھ میں ہے۔

سابق پاکستانی کپتان نے کہا کہ میں نے حال ہی میں افغانستان کے ساتھ معاہدے پر دستخط کردیے ہیں، وہ  کنٹریکٹ میں دلچسپی رکھتے تھے لیکن میں نے فی الحال ایک  سال کے لیے ہی میں حامی  بھری تاکہ بحیثیت کوچ اپنی کارکردگی کو اچھی طرح جانچ سکوں، یہ میرے لیے نیا تجربہ ہے، اگر وہ میری کارکردگی سے مطمئن ہوئے تو اس معاہدے کو مزید بڑھا سکتا ہوں۔ انھوں نے کہا کہ چونکہ افغانستان کے بیشتر کھلاڑی اردو سمجھ لیتے ہیں لہذا مجھے بھی کوچنگ کرنے میں آسانی ہو رہی ہے، رابطے میں کوئی چیز میری لیے روکاوٹ پیدا نہیں کرتی۔

Leave a Reply