مجسمہ آزادی سے خطرہ ٹل گیا۔

واشنگٹن (تازہ ترین) امریکہ کے مجسمہ آزادی کو بھم دھماکے سے اڑانے کی دھمکی دینے والے کو گرفتا رکرلیاگیا ۔ تفصیلات کے مطابق ٹیلی فون پر ملزمStatue of Liberty is safe now جبیسن اسمتھ کی دھمکی پرحکام نے مجسمہ آزادی کو 3200 سے زائد سیاحوں اور ملازمین سے خالی کرالیاتھا ۔ ملزم سمتھ کو ٹیکساس کے شمالی ضلعی عدالت میں پیش کیاگیا اور دوسری جانب اس کیخلاف مجرمانہ الزامات پر مبنی فائل جمعرات کو ہنی من ہٹن کی عدالت میں کھولی گئی ۔ بتایا جاتا ہے کہ ملزم نے اس سال 24 اپریل کو اپنے آئی پیڈ کی مدد سے نائین ون ون پر فون کرکے اپنی شناخت عبدل یاسین کے نام سے کرائی اور خود آئی ایس آئی ایس کا دہشتگرد بتایا اور دھمکی دی کہ ہم مجسمہ آزادی کو دھماکے سے اڑانے کی منصوبہ بندی کررہے ہیں  ۔ ورجینیا سے تعلق رکھنے والے ملزم سمتھ کیخلاف غلط بیانی ، گمراہ کرنے اور دھمکیاں دینے کے الزامات کے تحت مقدمہ قائم کیاگیا ہے جس کی زیادہ سے زیادہ سزاءپانچ برس قید ہے ۔

Leave a Reply