دہشت گردی کے خاتمے کے لیے ملکر کام کرنا ہوگا۔ صدر اشرف غنی

کابل: تازہ ترین: دہشت گردی کو جڑ سے ختم کرنے کے لیے سب کو مل کر کام کرنا ہوگا- اس کو جڑ سے ختم کرنے کے لیے ایک ساتھashraf ghani afghan president ملنا ہوگا۔پاکستان کے وفد سے ملاقات میں افغان کے صدر  محمد اشرف غنی اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ دہشت گردی کے خاتمے کے لیے ملکر کام کرنا ہو گا – افغان صدر اشرف غنی سے پاکستانی وفد نے ملاقات کی جس میں دوطرفہ تعلقات، خطے کی صورت حال سمیت دیگر اہم امور پرتبادلہ خیال کیاگیا۔ افغان قومی سلامتی کے مشیرحنیف اتمر نے الزام عائدکیاہے کہ حقانی نیٹ ورک اور طالبان اب بھی پاکستان سے افغانستان میں کارروائیاں کر رہے ہیں، پاکستانی حکومت نے اپنی سرزمین پردونوں دہشت گرد گروپوںکی سرگرمیاں روکنے کے لیے ضروری اقدامات نہیں کیے۔

افغان میڈیا کے مطابق صدارتی محل میں افغان صدراشرف غنی سے خیبرپختونخوا اور کوئٹہ سے تعلق رکھنے والے پاکستانی وفد نےروسی صدر کا امریکا پر الزام۔۔۔ لنک میں جانیے ملاقات کی۔ افغان صدر نے پاکستانی سیاسی قائدین کے وفدکوخوش آمدیدکہتے ہوئے کہاکہ افغانستان آپ کا اپنا گھر ہے، افغانستان پاکستان کے ساتھ اپنے تعلقات کو بہت اہمیت دیتا ہے، دونوں ممالک کے درمیان قریبی دوستانہ تعلقات ہیں، پاکستانی سیاسی قائدین کے وفد کے دورے سے دونوں ممالک کے درمیان تعلقات میں مزید بہتری آئے گی، دہشت گردی پوری دنیاکا مشترکہ مسئلہ ہے، اس سے نمٹنے کے لیے مل کر کام کرنا ہوگا۔ پاکستانی وفد میں محمودخان اچکزئی، اسفند یارولی، آفتاب شیرپاؤ اور افراسیاب خٹک شامل تھے۔

Leave a Reply