امن کا ایوارڈ ، کس کے نام

تازہ ترین) تیونس کی 4 تنظیموں  جنرل لیبر یونین، کفیڈریشن ، انسانی حقوق اور وکلاء تنظیم  کو امن کے نوبل انعام سے نوازا گیا ہے۔  ان تنظیموں نے 2013ء میں ایک پلیٹ فارم سے اپنی جدوجہد اس وقتtunis won noble peace prize شروع کی جب تیونس میں 2  اہم سیاسی شخصیات کو قتل کر دیا گیا تھا جسکے بعد ملک کے مذہبی اور سیکولر حلقے فسادات کی زد میں آگئے۔

نوبل انعام کمیٹی کے مطابق اگر یہ تنظیمیں  اس وقت اپنا کردار ادانہ کرتیں تو تیونس  کے خانہ جنگی کے شکار ہونے کا خدشہ بڑھ جاتا۔  ان تنظیموں کو ا ن کے اہم کردار کی بدولت ہی نوبل انعام سے نوازا گیاہے ۔ عرب انقلاب کے بعد تیونس نہایت کامیابی سے جمہوری راہ پر گامزن ہوا جب کہ عرب ممالک میں سیاسی اصطلاحات کے لیے عوامی طور پر سرگرم ممالک مثلاً  لیبیا، مصر، یمن اور شام میں یا تو حکومتیں تبدیل ہوئیں یا پرتشدد کارروائیاں شروع ہوگئیں لیکن تیونس اس انقلاب کو پرامن اندازمیں جھیل گیا۔تیونس کی  ان چاروں تنظیموں نے نہ صرف  ملک میں آئین میں مناسب تبدیلی کروائی  بلکہ ہر عمر ، جنس اور طبقے سے تعلق رکھنے والے افراد کو تحفظ کا احساس بھی دلایا۔

Leave a Reply